چند روایات کی تحقیق:
1*لولاک لماخلقت الافلاک_
(اےنبیﷺ!)اگر آپ نہ ہوتےتومیں آسمان(وزمین)پیدا نہ کرتا_"
تحقیق:اس بےسندجملےکوشیخ حسن بن محمد الصغانی(متوفی650ہجری)نے"موضوع"یعنی من گهڑت قراردیا_دیکهئے
{مضوعات الصغانی:78_وتذکره الموضوعات لمحمدطاہرالفتنی الہندی(متوفی986ہجری):86_والفوائدالمجموعہ فی الاحادیث الموضوعہ للشوکانی:ص326,والآثارالمرفوعہ فی الاخبار الموضوعہ لعبدالحئی اللکنوی:ص40}
2*اےمحمد!(صلی اللّٰه علیه وسلم)اگرآپ نہ ہوتےتو میں جنت پیدا نہ کرتا اوراگرآپ نہ ہوتےتومیں(جہنم کی)آگ پیدا نہ کرتا_"
[الاسرارالمرفوعہ:ص288_وکنزالعمال:431/11ح32025_وکشف الخفاء:45/ح91,بحوالہ دیلمی عن ابن عباس(ابن عمر)منقول ہے,دیلمی(متوفی509ہجری)کی کتاب فردوس الاخبارمیں یہ روایت بلاسندو بلاحوالہ مذکور ہے_{338/5ح8095}
تحقیق:یہ روایت بهی بےسندوبےحوالہ ہونےکی وجہ سےموضوع ومَردود ہے_
3*محدث احمد بن محمدبن ہارون بن یزیدالخلال(متوفی311ہجری)نےبغیرکسی سندوحوالےکےنقل کیاہےکہ"یامحمد!لولاک ماخلقت آدم_اےمحمد!(صلی اللّٰه علیه وسلم)اگر آپ نہ ہوتےتومیں آدم(علیه السّلام)کو پیدا نہ کرتا_"
{السنہ:ص237ح273}
تحقیق:یہ روایت بےسندہونےکی وجہ سےموضوع ومردود ہے_
4*لولاک ما خلقت الدنیا_اگرآپ(صلی اللّٰه علیه وسلم)نہ ہوتےتو دُنیا پیدا نہ کی جاتی یا میں دُنیا پیدا نہ کرتا_"
{الاسرارالمرفوعہ:ص288}
تحقیق:ابن عساکر والی روایت تاریخ دمشق:296,297/3_وکتاب الموضوعات لابن الجوزی:288,289/1_واللآلی المصنوعہ فی الاحادیث الموضوعہ للسیوطی:272/1میں موجودہے_
۔ابن جوزی نےکہا"هذاحدیث موضوع لاشک فیه....الخ_"
(کتاب الموضوعات نسخہ محققہ:ج2ص19ح549,نسخہ قدیمہ:289,290)
۔۔اور اس کےتین راوی ابوالسکین,ابراہیم بن الیسع اوریحیی البصری مجروح ہیں_ملخصاً
_سیوطی نےکہا"موضوع"یہ روایت موضوع(من گهڑت)ہے_"
[اللآلی المصنوعہ:272/1]
۔اس کاراوی خلیل بن مرہ ضعیف ہے_"
[تقریب التهذیب:1757]
5*ولولا محمد ما خلقتک_(اےآدم!)اگرمحمد(صلی اللّٰه علیه وسلم)نہ ہوتےتو میں تجهےپیدا نہ کرتا_"
{المستدرک للحاکم:615/2ح4228}
تحقیق:یہ روایت کئی وجہ سے"موضوع"ہے:
۔حافظ ذہبی نےکہا:"بل موضوع و عبدالرحمن واہ"بلکہ یہ روایت موضوع(من گهڑت)ہےاورعبدالرحمن(بن زیدبن اسلم)سخت کمزور راوی ہے_"
{تلخیض المستدرک:ج2ص672}
۔عبدالرحمن بن زید بن اسلم کےبارےمیں خود حاکم لکهتےہیں:"اس نےاپنےابا(زیدبن اسلم)سےموضوع حدیثیں بیان کی ہیں_حدیث کا علم جاننےوالوں پریہ مخفی نہیں ہےکہ ان موضوع روایات کی وجہ یہ شخص بذات خود ہے_"
{المدخل الی الصحیح:ص154,رقم:97}
۔یعنی اس نےاپنےباپ پرجهوٹ بولتےہوئےگهڑی ہیں_
تنبیہ:مستدرک والی روایت بهی عبدالرحمن بن زیدبن اسلم__بشرط صحت__اپنےباپ ہی سےبیان کرتاہے_
۔عبداللّٰه بن مسلم الفہری نامعلوم(مجہول)ہےیاوہ عبداللّٰه بن مسلم بن رشید(مشہورکذاب)ہے_"
{لسان المیزان :ج3ص359,360طبعہ جدیدہ:ج4ص161,162}
6*مستدرک کی دوسری روایت میں ہےکہ"اگرمحمد(صلی الله علیه وسلم)نہ ہوتےتو میں آدم(علیه السلام)کوپیدا نہ کرتااور اگر محمد(صلی الله علیه وسلم)نہ ہوتےتو میں جنت اور جہنم پیدا نہ کرتا_"
{615/2ح4227}
تحقیق:یہ روایت بهی موضوع اور مردود ہے:
۔حافظ ذہبی نےکہا"اظنه موضوعا علی سعید"میں سمجهتاہوں کہ یہ روایت سعید(بن ابی عروبہ)کی طرف مکذوباً منسوب کی گئی ہے_"
{تلخیص المستدرک:671/2}
۔عمرو بن اوس مجہول ہے_"
{میزان الاعتدال:246/3_ولسان المیزان:354/4}
۔سعیدبن ابی عروبہ مختلط ہیں_
۔سعیدبن ابی عروبہ اور قتادہ دونوں مدلس ہیں_
۔۔طبقات ابی الشیخ الاصبہانی(287/3ح494)میں جندل بن والق کی سندسےیہ روایت"ثنامحمدبن عمرالمحاربی عن سعیدبن اوس الانصاری عن سعید بن ابی عروبہ..."الخ کی سندسےمروی ہے_اس میں محمدبن عمر مجہول ہے_جس نےعمروبن اوس کوسعیدبن اوس سےبدل دیا_"
{فتاوی علمیه,کتاب التوحید:جلد2صفحه52}

۔۔۔۔۔جبکہ قرآنِ مجید میں ہےکہ:
وَمَا خَلَقۡتُ الۡجِنَّ وَ الۡاِنۡسَ اِلَّا لِیَعۡبُدُوۡنِ ﴿۵۶﴾
میں نے جنات اور انسانوں کو محض اس لئے پیدا کیا ہے کہ وہ صرف میری عبادت کریں۔"
(سورۃ الذاریات:۵۶)
و ما علینا الا البلاغ
 
Top