ذیشان خان

Administrator
کچھ لوگ مر جاتے ہیں مگر ان کے عظیم الشان کارنامے ہمیشہ زندہ رہتے ہیں

🔆شیخ الاسلام ابن تیمیہ رحمہ اللہ بغیر شادی کئے انتقال کر گئے، انہوں نے اپنے پیچھے کوئی اولاد نہیں چھوڑی جو ان کے لئے دعا کرے مگر انہوں نے اپنے پیچھے ایک صالح امت کو چھوڑا جو ان کے لیے برابر دعا کر رہی ہے۔

🔆امام نووی رحمہ اللہ بغیر شادی کئے اس دنیا سے رخصت ہو گئے، ان کی بھی کوئی اولاد نہیں جو ان کے حق میں دعا کرے مگر آج کون ہے جو ان کی مشہور کتاب "الاربعین النوویہ" کو نہ جانتا ہو۔

🔆مفسر قرآن امام ابن جریر طبری بغیر شادی کئے انتقال کر گئے، ان کی بھی کوئی اولاد نہیں مگر انہوں نے اپنے پیچھے ایک ایسا کارنامہ چھوڑا ہے جس سے کوئی بھی عالم دین بے نیاز نہیں ہو سکتا۔

🔆امام مالک رحمہ اللہ کے بارے میں امام ذہبی رحمۃ اللہ علیہ فرماتے ہیں: امام مالک کو ظلم و ستم کا نشانہ بنایا گیا اور اس قدر کوڑے مارے گئے کہ وہ بے ہوش ہو گئے۔ مجھے امید ہے کہ اللہ تعالی ہر کوڑے کے بدلے جنت میں ان کے درجات بلند فرمائے گا۔ امام مالک اس دنیا سے رخصت ہو گئے مگر ان کا ذکر خیر باقی ہے۔

🔆کہاں گئے وہ لوگ جنہوں نے امام احمد بن حنبل رحمہ اللہ کو قید و بند کی سزائیں دیں، انہیں کوڑے لگائے گئے۔ وہ سب مٹ گئے، ان کا کوئی نام و نشان باقی نہ رہا مگر امام احمد بن حنبل رحمہ اللہ کا علم، ان کی سیرت، ان کی زندگی کے مختلف حالات و واقعات اور ان کا مذہب ابھی تک باقی ہے۔

🔆کہاں گئے وہ لوگ جنہوں نے امام بخاری رحمہ اللہ سے عداوت و دشمنی کی، ان کے درپے آزار ہوئے اور انہیں جلاوطنی پر مجبور کیا یہاں تک کہ وہ اسی جلاوطنی کی حالت میں اس دنیا سے رخصت ہو گئے۔ مگر پھر بھی امام بخاری رحمہ اللہ کی شہرت و ناموری دیکھیے کہ دنیا میں مسلمانوں کا کوئی ایسا منبر یا اسٹیج نہ ہوگا جہاں سے یہ آواز نہ سنائی دیتی ہو: (راوہ البخاری) اسے امام بخاری نے روایت کیا ہے۔

ایک بار امام بخاری رحمۃ اللہ علیہ سے پوچھا گیا: آپ کو جو لوگ ستاتے ہیں اور آپ پر تہمت لگاتے ہیں ان پر آپ بد دعا کیوں نہیں کرتے؟
جواب میں امام بخاری رحمہ اللہ پیارے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کا یہ فرمان سنانے لگے :
(اصبروا حتى تلقوني على الحوض).
صبر کرو یہاں تک کہ حوض کوثر پر مجھ سے ملاقات کرو۔

📚 السير للذهبي 12/461

قد مات قوم وما ماتت مكارمهم
وعاش قوم وهم في الناس أموات

یقینا کچھ لوگ مر جاتے ہیں مگر ان کے عظیم الشان کارنامے ہمیشہ زندہ رہتے ہیں جبکہ کچھ لوگ زندہ رہتے ہوئے بھی مردوں میں شمار ہوتے ہیں۔

اللہ تعالی رشد و ہدایت کے مینار ان ائمہ کرام پر رحمت و انوار کی بارش برسائے
 
Top