سماحة الشيخ العلامة صالح بن محمد اللحیدان( رحمه الله رحمة واسعة)

(1932 - 5 جنوری 2022) (1350 هـ - 2 جمادى الآخرة 1443 هـ)
----------------------------------------------
عالم اسلام کی عظیم علمی شخصیت،سعودی عرب کے معروف سلفی عالم دین سماحة الشيخ العلامة صالح بن محمد اللحيدان ( رحمه الله رحمة واسعة) 88/سال کی عمر میں آج ریاض سعودی عرب میں انتقال کر گئے۔ انا لله وانا اليه راجعون

ولادت: ۶1932 ١٣٥٠ ھ میں قصیم کے شہر بکیریہ میں پیدا ہوئے،
آپ سابق چیف جسٹس تھے، ھيئة كبار العلماء، سپریم علماء کونسل کے اہم ممبر تھے، حرم مکی میں مدرس تھے، آپ کی بے شمار خدمات ہیں، اللہ قبول فرمائے آمین

شيخ ربيع_المدخلي حفظه الله فرماتے ہیں:

اگر شيخ صالح اللحيدان اور شيخ صالح الفوزان کی وفات ہوجائے تو دنیا تاریک ہو جائے گی، یہ کہہ کر شیخ ربیع مدخلی رونے لگے، اور کہا : میں چاہتا ہوں کہ میری موت ان دونوں کے بعد ہو۔

شیخ کی تالیفات:
۱-شرح القواعد الأربع.
۲-فضل دعوة محمد بن عبد الوهاب.
۳-إيضاح الدلالة في وجوب الحذر من أصحاب الضلالة.
٤-شرح حديث معاذ "حق الله على عبيده.

وفات: آج مورخہ 2/جمادی الثانی 1443ھ مطابق 5/ جنوری 2022بروز بدھ بوقت صبح آپ کی وفات ہوئی۔ رحمه الله رحمة واسعة
انا لله وانا اليه راجعون
اللهم اغفر له وارحمه وعافه واعف عنه واعذه من عذاب القبر وعذاب النار وادخله الفردوس الاعلى آمين يارب العالمين

نماز جنازہ وتدفین کی کارروائی مسجد الجامع الراجحی ریاض، سعودی عرب میں بعد نماز عصر عمل میں آئی، اللہ تعالیٰ آپ کی دینی خدمات کو قبول فرمائے، اور آپ کے ہزاروں شاگردوں کو آپ کے حق میں صدقہ جاریہ بنائے، آمین
------------------------------------------------
ابو حمدان اشرف فیضی
ناظم جامعہ محمدیہ عربیہ رائیدرگ، آندھرا پردیش
5/جنوری 2022، بروز بدھ
 
Top