ذیشان خان

Administrator
شادی کے بعد کی چند ذمہ داریاں۔

ازقلم: عبیداللہ بن شفیق الرحمٰن اعظمیؔ محمدیؔ مہسلہ
.........................................................
شادی عبادت بھی ہے اور ہماری ضرورت بھی ہے، اس کے بڑے فوائد ہیں، اسی لیے سارے مذاہب میں شادی کا نظام ہے مگر اسلام کا نظام نکاح سب سے زیادہ پاکیزہ ہے-
قارئین کرام! شادی تو سب کرتے ہیں اور لیٹ سویر سب کی شادی ہو جاتی ہے، لیکن کیا لوگ اپنی شادی کے بعد کی ذمہ داریوں کو محسوس کرتے ہیں اور انہیں پورا کرتے ہیں؟ اس مسئلے میں عوام کی بڑی لاپرواہی دیکھنے میں آتی ہے، اکثر لوگ تو اپنی ذمہ داریوں کو کچھ سمجھتے ہی نہیں ہیں، اور شریعت کی خوب مخالفت کرتے ہیں، آئیے آج یہ بات جاننے کی کوشش کرتے ہیں کہ شادی کے بعد ہماری کیا ذمہ داری بنتی ہے، ملاحظہ فرمائیں-
1) بیوی کا مکمل مہر جلد ادا کریں، اکثر لوگ اپنے نکاح میں خوب مہر طے کرلیتے ہیں اور مر جاتے ہیں لیکن مہر ادا نہیں کرتے ہیں، یہ بیوی پر بہت بڑا ظلم ہے-
2) ولیمہ کریں-
3) بیوی کے نان ونفقہ کی ذمہ داری اچھی طرح نبھائیں اور بیوی کے دیگر حقوق بھی بجا لائیں-
4) بیوی کے ساتھ حسن سلوک کریں، الفت ومحبت کے ساتھ رہیں، مار پیٹ اور اختلاف سے بچیں-
5) بیوی کو دین سکھائیں اور دینی تعلیمات پر عمل کرنے کی تاکید کریں-
6) سسرالی رشتہ سے تعلقات استوار رکھیں، صلہ رحمی کریں، گاہے بگاہے جاتے رہیں-
7) اپنا زیادہ وقت اپنے اہل خانہ کو دیں-
8) نیک اولاد کی کوشش کریں-
9) اپنی نگاہ اور شرم گاہ کی حفاظت کریں اور پاکدامنی کی زندگی گزاریں، تقوی اختیار کریں، گناہ سے بچیں، یہ سب سے بڑی ذمہ داری ہے، پیارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: "إِذَا تَزَوَّجَ العَبْدُ فَقَدِ اسْتَكْمَلَ نِصْفَ الدِّيْنِ، فَلْيَتَّقِ اللهَ في النِّصْفِ البَاقِي( صحيح الجامع الصغير:للالباني:430/حسن -سلسلة الأحاديث الصحيحة:625) جب بندے نے شادی کر لی تو اس نے نصف ایمان کو مکمل کر لیا، اب شادی کے بعد اسے چاہیے کہ وہ اللہ سے بقیہ نصف کے متعلق خوف کھائے-
اس حدیث سے معلوم ہوا کہ شادی کے بعد خاص طور سے اپنے ایمان اور اپنے اخلاق کے سلسلے میں اللہ سے ڈرنا چاہیے، تقوی کی زندگی گزارنا چاہیے، نگاہ اور شرم گاہ کی حد سے زیادہ حفاظت کرنا چاہیے، جنسی بےراہ روی سے غایت درجہ دور رہنا چاہیے، کیونکہ شادی یہ وہ چیز ہے جو برائی اور بدکاری سے بےنیاز کر دیتی ہے، لیکن اگر شادی کے بعد بھی کوئی اپنی شرم گاہ اور نگاہ کی حفاظت نہ کرسکے تو یہ بہت بڑی علامت ہے کہ ایسے شخص کا دل شدید بیمار ہے جو مستقبل میں بڑے فساد کا سبب بن جائے گا، والعياذ باللہ!
لہٰذا ہم سب کی ذمہ داری بنتی ہے کہ ہم شادی کے بعد کی تمام ذمہ داریوں کو بحسن وخوبی انجام دیں، تاکہ زندگی کا سارا سسٹم منظم طریقے سے چلے اور کسی طرح کی کوئی بدنظمی نہ ہوسکے، زوجین میں انسیت، الفت، محبت، قربت، خلوص اور اپنائیت پیدا ہو، دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ ہم سب کو اپنے حقوق وفرائض کی انجام دہی کی توفیق عطا فرمائے اور ہر فساد سے بچائے آمین-
══════════ ❁✿❁ ══════════
 
Top