ذیشان خان

Administrator
بسم الله الرحمن الرحيم وبه نستعين

ائمہ مساجد سیرت صحابہ کا درس دیں

ازقلم: عبیداللہ بن شفیق الرحمٰن اعظمیؔ محمدیؔ مہسلہ
.........................................................
صحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اجمعین اللہ کے چنندہ افراد تھے، اللہ نے صحابہ کرام کو اپنے دین کی خدمت اور رسول کی صحبت کے لیے چن لیا تھا، اللہ رب العالمین نے صحابہ کرام کے ایمان وعقیدے اور ان کی عبادات وطاعات سے اس قدر راضی ہوا کہ انہیں دنیا میں ہی جنت کی بشارت دے دی اور ان کو آنے والی نسلوں کے لیے مشعل راہ بنا دیا، ان کو ہدایت کا معیار اور نمونہ بنا دیا-
قارئین کرام! ہم سب یہ جانتے ہیں کہ انبیاء کرام کے بعد صحابہ کرام علی الاطلاق تمام انسانوں میں سب سے افضل ہیں، صحابہ کرام نے دین کو دنیا کے چپے چپے میں پھیلایا ہے، لہٰذا ہمارا فرض بنتا ہے کہ ہم صحابہ کرام کی سیرت کو پڑھیں پڑھائیں اور سب کو بتائیں کہ صحابہ کرام اللہ کے اولیاء ہیں، مگر افسوس کی بات ہے کہ آج دنیائے انسانیت صحابہ کرام کی سیرت سے بالکل نابلد ہے، ہمارے بچے ہمارے نوجوان کھلاڑیوں کے بارے میں اور فلمی اداکاروں کے بارے میں مکمل معلومات رکھتے ہیں مگر اسلامی ہیرو کے بارے میں کچھ نہیں جانتے ہیں، اسی لیے ہم بار بار کہتے ہیں کہ ائمہ مساجد کو چاہیے کہ وہ اپنے خطبات اور یومیہ دروس میں ایک ایک صحابی کی سیرت آسان اور نہایت سہل انداز میں بیان کریں، یا ہفتہ میں ایک دن سیرت صحابہ کے لیے ایک پروگرام منعقد کریں، نوجوانوں کو ایسی مجالس سے جوڑنے کی کوشش کریں، ان شاءاللہ صحابہ کرام کی زندگیوں سے لوگوں کو ہدایت ملے گی، نیک جذبہ پیدا ہوگا، دینی بیداری کا ماحول بنے گا، ایمان مضبوط ہوگا، سماج ومعاشرے میں انقلاب برپا ہوگا، کیونکہ صحابہ کرام کی ایسی مثالی زندگیاں ہیں جنہوں نے بہتوں کی زندگیاں سدھاری ہیں، لیکن بہت دکھ کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ آج ہم علماء کرام نے سیرت صحابہ کو بیان کرنا چھوڑ دیا ہے، اسی لیے سماج میں نیک جذبہ کا فقدان ہے، علم وعمل کا بحران ہے، ایمان واخلاق کا زوال ہے، مفاد پرستی، چاپلوسی، مادیت پرستی اور دنیا داری کا بھوت سوار ہے، حلال وحرام کی کچھ تمیز نہیں ہے، الغرض آج بداخلاقی اور بےایمانی کا دَور ہے، لیکن جب ہم یہ لوگوں کو بتائیں گے کہ صحابہ کرام ایسے رہتے تھے، یہ کرتے تھے، یہ کھاتے تھے، اتنی عبادت کرتے تھے، اتنا اللہ کے راستے میں خرچ کرتے تھے، ان کا اخلاق ایسا تھا تو اس سے دل کا تزکیہ ہوگا، اللہ ہمیں صحابہ کرام کی سیرت پڑھنے پڑھانے اور اس کے تقاضوں کو پورا کرنے کی توفیق عطا فرمائے آمین-
═════ ❁✿❁ ══════
 
Top