ذیشان خان

Administrator
امـام احمـد بـن یـونس رحمــہ اللّٰه فرماتـے ہیـں :

''میـں کسی رافضی کا ذبیحـہ نہیں کھاتا کیونکہ وہ میرے نزدیک مرتد ہے۔''

📓 |[ اعتقاد اھل السنّـة والجمـاعة اللالکائـی ج /٨ صــ : ٤٥٩ ]|

🔘 اِسـی طـرح فرمایا :

''اگر یہـودی کسـی بکری کو ذبح کرے اور رافضـی کسی بکری کو ذبـح کرے تو میـں یہـودی کا ذبیحـہ کھالوں گا (کیونکـہ قرآن نے اہلِ کتاب کا ذبیحہ حلال کیـا ہے) لیکــن رافضی کی ذبح کردہ بکـری نہیں کھاؤں گا اِس لئـے کـہ وہ اِسلام سے مرتـد ہے۔''

📓 |[ الصـارم المسلـول صــ : ٥٧٠ ]|
 
Top