ذیشان خان

Administrator
کسی مسلمان کو اس کے کسی گناہ کی وجہ سے کافر کہنا کیسا؟

✒ کسی مسلمان کو اس کے کسی گناہ جیسے چوری، زنا، سود کھانا ، شراب پینا، یا ماں باپ کی نافرمانی کرنے یا ان کے علاوہ کسی اور بڑے گناہ کی وجہ سے اسے کافر کہنا یا کافر بنا دینا جائز نہیں ہے جب تک کہ وہ ان گناہوں کو حلال اور جائز نہ سمجھے. یا شرک اور کفر کا کام نہ کرے، کیوں کہ اللہ تعالیٰ نے سورہ نساء آیت نمبر (116) میں فرمایا ہے جس کا ترجمہ ہے *: (اللہ تعالیٰ قطعاً نہ بخشے گا کہ اس کے ساتھ شرک کیا جائے، ہاں شرک کے علاوہ دوسرے گناہوں کو جس کے لیے چاہے معاف فرما دے گا)*. اسی طرح متواتر حدیثوں سے ثابت ہے کہ اللہ تعالیٰ جہنم میں سے ان لوگوں کو نکالے گا جن کے دل میں سرسوں کے برابر بھی ایمان ہوگا.

📚 دیکھیے : العقيدة الصحيحة (17)
 
Top