ذیشان خان

Administrator
طوفان وسیلاب کے وقت اذان کا حکم

===============
سوال کیا جب کوئی بھی طوفان یا کوئی بھی سیلاب وغیرہ آئےاس وقت میں نے سنا ہے اذان دینے سے دور ہو جاتے ہیں کیا یہ درست ہے کوئی دلیل ہو تو بتائیں۔ جزاک اللہ خیر ۔

اذان پنچ وقتہ نمازوں اور جمعہ کے لئے حکم ہوا ہے۔ نیز بچے کی پیدائش پہ دائیں کان میں بھی مشروع ہے ۔ باقی اور کسی جگہ اذان دینے کا ذکر نہیں ملتا ۔ اگر طوفان آئے، سیلاب آئے یا زلزلہ وغیرہ (جوکہ اللہ کی نشانیوں میں سے ہیں)تو اس وقت توبہ واستغفار، ذکر واذکار، مصیبت کی دعائیں اور نماز پڑھنا چاہئے ۔

واللہ اعلم
مقبول احمد سلفی
 
Top