ذیشان خان

Administrator
وکلوا من رزقہ،والیہ النشور
(الملک)

✍⁩جلال الدین القاسمی

پہلے ٹکڑے کا دوسرے ٹکڑے سے ربط،دعوی اور دلیل کی قبیل کا ہے

آدمی کو غلہ زمین سے ملتا ہے
مثلا،ادمی گیہوں کا دانہ زمین میں ڈالتا ہے،یہ دانہ زمین میں سڑ گل جاتا ہے اور اسی سڑے گلے دانے سے ایک پودا نکلتا ہے
اسی طرح نشور،ہے کہ جب تم سڑ گل کر مٹی ہو جاؤگے اسی مٹی سے دوبارہ زندگی کی نمود ہوگی

نکتہ۔
سڑے گلے دانے کے مقابلے میں نیا نکلنے والا پودابالکل مختلف اور کہیں زیادہ بہتر ہوتا ہے اسی طرح مرنے کے بعد کی زندگی دنیا کی زندگی سےبالکل مختلف اور کہیں زیادہ بہتر ہوگی
نکتہ ثانیہ،
خبر( الیہ)کو مقدم کرکے یہ بتایا گیا کہ تم بھاگ کر کہیں نہیں جاسکتے،صرف اسی کی طرف جانا ہے

فسبحان من ھذا کلامہ

آیت کریمہ کے ان دو مختصر ٹکڑوں کو سامنے رکھ کر آدمی جتنا چاہے آنسو بہا لے
 
Top